ہفتہ , مئی , 30 , 2020

دوائی کی یاد دہانی کے لیے زبردست ایجاد ، مریضوں کے لیے آسانی

Smart Pill

لندن :لندن کے ماہر ڈاکٹرز نے ایک اسمارٹ بوتل ایجاد کی ہے جس سے مریض کو دوائی کے اوقات جاننے میں آسانی ہوگی۔ اس بوتل کو ” پل کنیکٹ کا نام دیا گیا ہے۔

حال ہی میں  ایجاد ہونے والی ایک اسمارٹ بوتل نے بہت سے مریضوں کی مشکلات حل کر دی ہیں ۔ اس بوتل کو کچھ مریضوں پر آزمایا گیا ہے جس سے مثبت نتائج سامنے آئے ہیں۔ایک تحقیق کے مطابق دنیا بھر کے 40 سے  50  فیصد مریض مصروفیت یا بھولنے کی وجہ سے دوائی وقت پر نہیں لے پاتے ہیں ، تاہم سنگین بیماریاں جیسے ذیابیطس ، دل کا مرض اور دیگر بیماریوں کی وجہ سے دوائی وقت پر نہ لینا خطرے کاباعث بن سکتا ہے ۔

یوکلڈنامی کمپنی نے اسمارٹ بوتل اور ایپ تیار کی ہے ۔بوتل کے اوقات مریض دوائی کے اوقات کے مطابق بھی سیٹ کر سکتا ہے،یہ بوتل با ہر سے بند رہے گی اور دوائی کھانے کے وقت ہی کھلے گی۔بوتل میں صرف ٹھوس دوا رکھی جا سکتی ہے مثلا کیپسول اور گولیا ں وغیرہ۔ یہ بوتل دوا لینے کا سارا عمل ریکارڈکر لے گی اور ایپ کی مدد سے آپ کے ڈاکٹر تک ساری معلومات پہنچ جائے گی۔

تجربے کے پہلے مرحلےمیں اس بوتل کو 10 مریضوں  پر آزمایا گیااور مثبت نتائج کے بعد اس کو 80 افراد نے استعمال کیا اور 100٪ نتائج سامنے آئےہیں۔ اگلے سال یہ بوتل ان 200 لوگوں کو دی جائے گی جو سنگین بیماریوں میں مبتلا ہیں۔

یہ بوتل اسمارٹ واچ یا فون میں بھی سیٹ کی جا سکتی ہے جس کی نوٹیفکیشن دوائی کھانے کے وقت واچ یا فون پہ ظاہر ہو جائے گی ۔ مثال کے طور اگر آپ کو دوائی 5 بجے لینی ہے تو آپ پہلے اس کی ٹائمنگ واچ یا فون میں سیٹ کریں گے اور دوائی کے وقت بوتل خود کھل جائے گی اور دوائی لینے کے بعد بوتل خود بند ہو جائے گی ۔

اس ایک بوتل کی قیمت 25 پاؤنڈز ہے جو پاکستانی پانچ ہزار روپے کے قریب ہے ۔ فی الحا ل یہ بوتل مارکیٹ میں نہیں آئی ہے ابھی تجربے کے مراحل میں ہے ۔

Check Also

Social media impacting teenager's health

سوشل میڈیا بچوں کے لیے نقصان دہ ثابت

سڈنی : سکول جانے والے 1000 بچوں کا مطالعہ کیا گیاہے جس میں یہ ظاہر …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے